Ahmed Faraz Love Poetry

Pages: 1 2 3 4 5 6 7 8 9 10 11 12

  اپنے اپنے بے وفاؤں نے ھمیں یکجا کیا ورنہ میں تیرا نہیں تھا اور تو میرا نہ تھا

Apnay apny bewafaon nay hamen yakja kiya,
warna tu mera nahi tha aur tu mera na tha

  عقل وہ ناصح کہ ھر دم لغزشِ پا کا خیال دل وہ دیوانہ یہی چاھے کہ نادانی کرے

Aqal naseh k har dam laghzish ka khyal,
dil wo deewana yahi chahy k nadany kary

  زندگی تیری عطا ھے تو یہ جانے والا تیری بخشش تیری دہلیز پہ دھر جائے گا

Zindgy tery ata hy to ye janay wala,
tery bakhshish tery dehleez p dhar jaye ga

  ابھی ابھی وہ ملا تھا ھزار باتیں کی ابھی ابھی وہ گیا ھے مگر زمانہ ھوا

Abhi abhi wo mila tha hazar baten ken,
abhi abhi wo gya hy magar zamana huwa

  اب اسے لوگ سمجھتے ھیں گرفتار میرا سخت نادم ھے مجھے دام میں لانے والا

Ab usy log samjaty hain girftar mera,
sakht nadim hy muj dam main lanay wala

  اب کے وہ درد دے کہ میں روؤں تمام عمر اب کے لگا وہ زخم کہ جینا محال ھو

Ab kay wo dard day k main rooun tmam umar,
ab kay laga wo zakhm k jeena mahal ho

  اب کے ھم بچھڑے تو شاید کبھی خوابوں میں ملیں جس طرح سوکھے ھوئے پھول کتابوں میں ملیں

Ab kay ham bichray to shayad kabhi khwabon main milen,
jis trah sookhay huwy phool kitabon main milen

  اب کے بچھڑے تو نہ پہچان سکیں گے چہرے میری چاھت ترے پندار کو مر جانا ھے

Ab kay bichray to na pehchan saken gay chehray,
mery chahat tery pindar ko mar jana hy

Leave a Reply